کوئٹہ میں وزیر کی گاڑی پر سوار 2 افراد ہلاک

کوئٹہ میں وزیر اسرار کی گاڑی پر نامعلوم افراد کی طرف سے 2 افراد ہلاک

اے آر وائی نیوز کے مطابق کوئٹہ پشین اسٹاپ گاڑی پر وزیر اسرار کی انتہائی نامعلوم افراد نے کہا کہ جس کے نتیجے میں 2 افراد ہلاک اور راہگیر بچہ زخمی

پولیس کا کہنا ہے کہ سواری نے ہیلمٹ پہننے کے لیے گاڑی چلانے کا مشورہ دیا ہے۔

پولیس کا بتانا ہے کہ گاڑی میں اسرار موجود نہیں تھے، اس کی گاڑی پر پولیس اہلکار موجود تھے۔

اسرار ترین کے بھتیجے کا کہنا ہے کہ ہمارے گھر کی گاڑی تھی کہ اس پر عمل کرنے کی اجازت نہیں ہے۔

شہید ہونے والے کو بتانا ہے کہ زندہ بچ جانے والے میں گارڈ محمد یوسف اور ضیاء الدین شامل ہیں جبکہ زخمی ہونے والے کو طبی امداد کے لیے اسپتال منتقل کیا گیا ہے۔

آپ کی اطلاع ملتے ہیں کہ پولیس کی بھاری نفری موقع پر پہنچ گئی اور علاقے کو محاصرے میں لے کر موقع سے شواہد اکٹھے کرلے، تھانہ سول لائن کی پولیس کی مزید تحقیقات کی ضرورت ہے۔

دوسری طرف وزیر اعظم اسرار کا کہنا ہے کہ اس کی ذاتی ملکیت ہے۔

انہوں نے کہا کہ مردہ شخص شہزادہ کے باڈی گارڈ تھے، اسلام آباد میں موجود ہوں ابھی علم کا۔

تبصرے

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں