پاکستانی خاتون کوہ پیما نے ماؤنٹ ایورسٹ سر تسلیم کیا۔

پاکستانی کوہہ نائلہ کیانی نے دنیا کی بلند ترین چوٹی سر چوٹ، دو سال میں پانچوں سر کرنے کا اعلان اپنے نام کیا۔

پاکستانی خاتون کوہ پیما نائلہ کیانی دنیا کی بلند ترین چوٹی ماؤنٹ ایورسٹ سر انجام دینے میں کامیاب ہو گئی۔

نائلہ کیانی کا تعلق پنجاب میں اپنے شہر کے علاقے گوجر سے۔ رواں سال 2023 میں نائلہ کیانی ماؤنٹ ایورسٹ سر کرنے والی پہلی بین الاقوامی کوہ پیما۔

نائلہ کیانی نے اپنے انسٹاگرام اکاؤنٹ پر پوسٹ کیا کہ 14 مئی کی صبح 8 بج کر 2 منٹ پر وہ پاسنگ ٹمبا کے شرارت ماؤنٹ ایورسٹ کی چوٹی پر پہنچ گئے

الپائن کلب آف پاکستان کے مطابق نائلہ کیانی نہ صرف گاشر برم کو فتح کرنے والی پہلی پاکستانی خاتون کو پیما ہیں بلکہ انہوں نے اپنی پہلی مہم میں ہی 8 ہزار میٹر کی چوٹی فتح کی۔

وہ اس سے قبل گیشربرم 1، گیشربرم 2، کے ٹو اور اناپورنا کو بھی سر کر کے۔ نائلہ کیانی اس سیزن میں ماؤنٹ سے بھی سر کھولیں۔

تبصرے

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں