ضمانت منسوخی کے بعد پرویز الٰہی کی گرفتاری کے لیے کوششیں جاری ہیں۔

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنما پرویز الٰہی پریس کانفرنس سے خطاب کر رہے ہیں۔ – آن لائن/فائل
  • الٰہی ترقیاتی سکیم کرپشن کیس میں ضمانت پر تھے۔
  • کونسل کا کہنا ہے کہ پرویز الٰہی کو سینے میں درد ہے۔
  • عدالت کے ساتھ شیئر کی گئی میڈیکل رپورٹ جعلی قرار دی گئی۔

لاہور: پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنما پرویز الٰہی کی انسداد بدعنوانی کی عدالت سے بدعنوانی کے مقدمے میں ضمانت منسوخ ہونے کے بعد ان کی گرفتاری کے لیے کوششیں جاری ہیں۔

پی ٹی آئی رہنما کے پیش نہ ہونے پر عدالت نے ضمانت منسوخ کر دی۔ انہیں آج تک ضمانت مل گئی۔

الٰہی کے وکیل نے جج کے سامنے استدعا کی کہ ان کے موکل کے سینے میں درد ہونے کی وجہ سے آنے سے قاصر ہیں۔

تاہم استغاثہ نے موقف اختیار کیا کہ سابق وزیراعلیٰ پنجاب کی میڈیکل رپورٹ “جعلی” تھی جس کی سروسز ہسپتال نے بھی تصدیق کی تھی۔

دلائل مکمل ہونے کے بعد جج نے الٰہی کی ضمانت منسوخ کر دی۔

سابق وزیراعلیٰ پنجاب نے حال ہی میں جہاز سے چھلانگ لگا کر رواں سال مارچ میں پی ٹی آئی میں شمولیت اختیار کی تھی۔ انہیں پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان نے صدر مقرر کیا تھا۔

اس کے بعد سے پی ٹی آئی رہنما کو گرفتار کرنے کی متعدد کوششیں ہوئیں اور قانونی مشکلات میں اضافہ ہوا۔ تاہم، اس نے ان میں سے زیادہ تر مقدمات میں ضمانت حاصل کر لی تھی جس میں آج سماعت ہوئی۔

ضمانت کی منسوخی اور ان کی گرفتاری کی منصوبہ بندی بھی پارٹی چیئرمین عمران خان کی گرفتاری کے بعد ہونے والے مظاہروں کے بعد پی ٹی آئی کے خلاف کریک ڈاؤن کے درمیان سامنے آئی ہے۔

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں