ٹیٹرا پیک لسی کی ویڈیو : حقیقت سامنے آگئی

گزشتہ روز سوشل میڈیا پر ٹیٹرا پیک لسی کے بیانات سے ویڈیو ہونے والی حقیقت سامنے آگئی، ام کمپنی نے ویڈیو کو قرار دے دیا۔

ویڈیو میں بتایا گیا کہ ایک شخص امول ٹیٹرا پیک لسی کا پیکٹ خرید کر لایا اور اسے چاقو کی مدد سے کاٹ رہا ہے، ویڈیو میں اس شخص کا دعویٰ ہے کہ اس ڈبے میں لسی میں پھپھوندی (فنگس) لگی ہے۔

خبر رساں اداروں کی رپورٹ کے مطابق اس شخص نے ٹیٹرا پیک مشروب کو پینے سے لوگوں کو ایسی معلومات فراہم کیں کہ جس سے لوگوں کو سننے کے بارے میں سوچ پیدا ہو جائے۔

اس سے امول کمپنی نے فوری طور پر ویڈیو کا جواب دیتے ہوئے اپنے ٹویٹر صفحے پر وضاحت کی اور بتایا کہ یہ ویڈیو شامل ہے۔

امول نے اپنا مؤقف پیش کرتے ہوئے واضح کیا کہ ویڈیو کو پسند کرتے ہیں اور اسے صرف لوگوں کو امول کی مصنوعات کے لیے ڈرامے کے لیے بنایا گیا تھا، خواہ وہ لسی، دہی، یا کوئی دودھ کی مصنوعات۔

کمپنی کے ترجمان نے اس بات کی بھی تصدیق کی ہے کہ ویڈیو میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ اندر ہی اندر فنگس کی پیشکش کی گئی تھی کیونکہ اس پر مکمل طور پر ٹیٹر مصنوعات سیل ہوتی ہیں اور اس کو آپ تک نہیں پہنچایا جاتا۔ اس کے لیے سیل بند باکس میں فنگس بڑھنے کا کوئی حصہ نہیں ہے۔

کمپنی کے ترجمان نے مزید کہا کہ ویڈیو بنانے والی کمپنی کو اس منظر کو پورا کرنے کے لیے گھڑ لیا گیا تھا، اس کے لیے امول کی ہر پروڈکٹ پر وارننگ درج ہوتی ہے۔

صارفین کی طرف سے خریدی گئی کوئی بھی پروڈکٹ جو کہ لکھی گئی ہو اس کی ذمہ داری کمپنی کو نہیں ہے کیونکہ یہ صارفین کی ذمہ داری ہے کہ وہ بھی کسی پروڈکٹ کو کمپنی سے پہلے چیک کریں۔

تبصرے

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں